19 September, 2012 22:39


ISLAMABAD TONIGHT

WITH NADEEM MALIK

19-09-2012

ایسے لوگوں کی لسٹیں بن چکی ہیں جو بتایں گے کہ پچھلے چار پانچ سالوں میں کیا ہوا۔ شاہین صہبای کی اسلام آباد ٹونایٹ میں گفتگو

اگر اب بحی نہیں پوچھا جاے گا کہ کیا ہوا تو پھر کیا یو این او والے پوچھیں گے۔ شاہین صہبای

ہم جس سطح تک گر چکے ہیں آصف زرداری نے اسے نقطہ انتہا تک پہنچا دیا ہے۔ اکرم شیخ

آصف زرداری نے پرویز مشرف کے ایجنڈے کو ہی آگے بڑھایا ہے۔ اکرم شیخ

ملک سے پیسہ باہر لے جانے والوں کی نگرانی کی جا رہی ہے۔ ڈاکٹر شاہد مسعود

این آراو کی وجہ سے پچھلی حکومت کے لوگ موجودہ میں بھی شامل ہو چکے ہیں۔ ڈاکٹر شاہد مسعود

لگتا ہے کہ شاہین صہبای زرداری سے غصے ہیں ہر وقت ان کے جانے کی خبریں دیتے رہتے ہیں۔ فواد چوہدری

فواد چوہدری چھ مہینے پہلے تک میری مشرف سے ملاقات کروانے کی کوشش کر رہے تھے لیکن اب زرداری کے ساتھ ہیں۔ شاہین صہبای

آیندہ دنوں میں ملک میں ایک غیر جانبدار نگران حکومت بننے والی ہے۔ شاہین صیبای

نگران حکومت ملک میں تین ماہ میں کوی اچھی تبدیلی نہیں لا سکتی۔ اکرم شیخ

اگلے الیکشن شفاف نہ ہوے تو ملک میں بہت بڑا طوفان آے گا۔ اکرم شیخ

حکومت مسلم لیگ ن اور دوسرے اپوزیشن جماعتوں سے مل کر نگران حکومت بناے گی۔ فواد چوہدری

نگران حکومت کے وزیراعظم کے لئیے ایک نام کا فیصلہ ہو چکا ہے۔ فواد چوہدری

پاکستان کی معیشت پچھلے چار پانچ سالوں میں حکومت کی ترجیح نہیں تھی اس لئیے اس پر توجہ نہیں دی گئی۔ شاہین صہبائی

موجودہ حکومت نے کرپشن اور مس گورننس کے علاوہ کچھ نہیں کیا۔ شاہین صہبائی

غیر ملکی ادارے کے مطابق پاکستان میں دیہاتوں میں رہنے والوں کی معیشت میں پچاس فیصد بہتری آئی ہے۔ فواد چوہدری

مجھے حکومت کے ایک اتحادی نے کہا ہے کہ اسے الیکشن ہوتے دکھائی نہیں دیتے۔ ڈاکٹر شاہد مسعود

بابر اعوان کے مطابق خط لکھنے کا فیصلہ کر کے فاروق نائیک نے صدر کو جال میں پھنسا دیا ہے۔ ڈاکٹر شاہد مسعود

سوئیس عدالت کو خط لکھنے کا یہ مطلب نہیں ہے کہ مقدمات دوبارہ کھل جایں گے۔ فواد چوہدری

اگلے الیکشن میں مری اور بگٹی وغیرہ کا حصہ لینا بہت ضروری ہے۔ ڈاکٹر شاہد مسعود

آصف زرداری کی خواہش ہے کہ فوج نے اسے اقتدار دیا تھا اور وہ اسے فوج ہی کو واپس کر کے جائے۔ اکرم شیخ

Advertisements