4 April, 2017 20:53


NADEEM MALIK LIVE

www.samaa.tv/videos/NadeemMalik

04-APRIL-2017

حکومت نے جنرل راحیل کو خوشی کے ساتھ این او سی جاری کیا ہے سعودی عرب کے ساتھ ہمارے بہت اچھے تعلقات ہیں۔ آج کے واحد مہمان خواجہ آصف کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

نواز شریف سعودی عرب کے دورے پر گئے تو سعودی عرب نے خواہش کا اظہار کیا تھا کہ جنرل راحیل اسلامی فوج کی سربراہی کریں۔

جنرل راحیل عمرے پر گئے تو سعودی عرب نے ان سے بھی اپنی خواہش کا اظہار کیا بعد میں مجھ سے بھی کیا تھا۔

جنرل راحیل اب سعودی الائنس کا حصہ ہوں گے اور وہی ان کو معاوضہ ادا کریں گے۔

یمن میں ہماری یا سعودی الائنس کی کوئی مداخلت نہیں ہو گی۔

اگر ایران کے جنرل راحیل کے سعودی الائنس کا سربراہ بننے پر کوئی تحفظات ہیں تو ہم ان پر ضرور بات کریں گے

ہماری فوج کا سعودی عرب میں حرمین شریفین کی حفاظت کے علاوہ کوئی اور کردار نہیں ہو گا اس وقت بھی ہماری بارہ سو کے قریب فوج وہاں موجود ہے۔

پاکستان کے سعودی عرب اور بحرین کے ساتھ چالیس سالوں سے زیادہ پرانے تعلقات ہیں۔

پاکستان سعودی عرب اور دوسرے برادر ممالک کے افسروں اور چیف آرمی سٹاف کو بھی ٹریننگ دیتا ہے۔

پاکستان کے سعودی عرب میں چھبیس لاکھ کے قریب لوگ کام کر رہے ہیں۔

ہمارے مفاد میں یہ بات ہے کہ عرب ممالک پاکستان کے ڈیفنس پروگرام میں سرمایہ کاری کریں بہت سے ممالک دلچسپی ظاہر کر رہے ہیں۔

پاکستان نے تئیس مارچ کو جو پچیس سو میل تک مار کرنے والے میزائیل کو پیش کیا ہے یہ بہت بڑی بات ہے اور ہمیں اس پر فخر کرنا چاہئیے۔

میری اطلاع ہے کہ عمران خان نے آرمی چیف سے ملاقات کے لئیے کافی دیر سے درخواست کی ہوئی تھی۔

عمران خان کی آرمی چیف سے ملاقات کا ایجنڈا کیا تھا یہ مجھے معلوم نہیں ہے۔

ہمارے ہاں ملاقاتوں کا ریکارڈ رکھنے کا کوئی رواج نہیں ہے لیکن یہ ہونا چاہئیے۔

پاکستان میں سول ملٹری تعلقات پر افواہوں جیسے معاملات ختم ہو چکے ہیں اب اس کو موضوع بحث بنانا ختم کر دینا چاہئیے۔

جنرل کیانی نے مدت ملازمت میں توسیع اپنی مرضی سے حاصل کی لوگ خواہشات کے یچھے بھاگتے رہتے ہیں حتی کہ قبروں میں جا پہنچتے ہیں۔

ہماری جماعت میں سے کچھ لوگوں کی خواہش تھی کہ جنرل راحیل کو توسیع دے دی جائے لیکن نواز شریف نے ہمیشہ کہا کہ یہ نہیں ہونا چاہئیے۔

میڈیا کو اپنا رول ادا کرنا چاہئیے مجھے پیسے دے کر اپنی کارکردگی کے متعلق بتانا پڑتا ہے۔

اگر ہم نے پاکستان میں اداروں کو مظبوط کرنا ہے تو میڈیا کو اپنا کردار ادا کرنا ہو گا۔

میری نیوز لیکس پر کوئی معلومات نہیں ہیں لیکن میں سمجھتا ہوں کہ یہ معاملہ ختم ہو چکا ہے۔

پیپلز پارٹی کی کسی کے ساتھ کوئی انڈر سٹینڈنگ نہیں ہوئی یہ بات درست نہیں ہے۔

نعیم الحق کا بیان کہ نواز شریف کی حکومت امریکہ اور سعودی عرب نے بنوائی تھی اس قابل نہیں ہے کہ اس پر توجہ دی جائے۔

مشرف کی سیاست پاکستان میں ختم ہو چکی ہے ان کو یہ بات سمجھ لینی چاہئیے۔

اس وقت بجلی کا شارٹ فال دو ہزار تین سو سے زیادہ ہے۔

بجلی بناے والے کچھ پلانٹس کو اوورہال کرنے کے لئیے بند کیا ہوا ہے نیز پانی سے بجلی کی پیداوار میں کمی ہوئی ہے۔

ہماری کوشش ہو گی کہ شہری علاقعوں میں تین گھنٹے اور دیہاتی علاقعوں میں پانچ گھنٹے سے زیادہ لوڈ شیڈنگ نہ ہو۔

http://naeemmalik.wordpress.com/

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s