17 April, 2017 21:34


NADEEM MALIK LIVE

www.samaa.tv/videos/NadeemMalik

17-APRIL-2017

جنرل راحیل شریف اور جنرل باجوہ کی شخصیتوں میں بہت فرق ہے۔ آج کے واحد مہمان آصف علی زرداری کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

جنرل راحیل شریف سے میری دو ملاقاتیں ہوئیں لیکن جنرل باجوہ سے کوئی ملاقات نہیں ہوئی۔

میں سمجھتا ہوں کہ میرے دوستوں کو ایجنسیوں نے اٹھایا ہے۔

میرا ایان علی کے ساتھ کوئی تعلق نہیں ہے کچھ لوگوں نے یہ تاثر بنانے کی کوشش کی ہے۔

نواب لغاری کا پیپلز پارٹی کے ساتھ کوئی تعلق نہیں ہے۔

وفاق سندھ سے گیس لے کر اپنوں کو دینا چاہتا ہے۔

ہم پنجاب میں گیس کی کمی نہیں چاہتے۔

میرا اومنی گروپ سے کوئی تعلق نہیں ہے میں ان کی شوگر ملوں کو صرف گنا سپلائی کرتا ہوں۔

عزیر بلوچ ایک بہت خطرناک آدمی ہے پیپلز پارٹی نے اپنے دور میں ان کے خلاف کئی آپریشنز کئیے تھے۔

میں اور بلاول دونوں پیپلز پارٹی کو لیڈ کر رہے ہیں امید ہے کہ ہم بہتر نتائج دیں گے۔

موجودہ حکومت نے کچھ نہیں کیا میں بلوچستان کے دررے پر گیا تھا وہاں کے لوگ ہمیں دعوت دے رہے ہیں۔

سی پیک منصوبے پر میں نے دستخط کئیے تھے گوادر کی بندگاہ بھی میں نے چین کو دی تھی۔

دو ہزار تیرہ کا الیکشن آر اوز کا ہونے کے باوجود پیپلز پارٹی کے امیدواروں نے ستر ستر ہزار اور اسی اسی ہزار ووٹ حاصل کئیے تھے۔

بھٹو دور کی طرح آج بھی لوگ پیپلز پارٹی کے ساتھ ہیں میں چوبیس اپریل کو مردان میں جلسہ کرنے جا رہا ہوں۔

اگر پیپلز پارٹی نے مجھے منتخب کیا تو میں وزیراعظم بنوں گا۔

میری بیٹیوں میں سیاسی سوجھ بوجھ ہے انہوں نے عرفان مروت اور مردان کے واقع پر کھل کر اپنی رائے کا اظہار کیا۔

میں چاہتا ہوں کہ پاکستان کی ہر بیٹی محترمہ بینظیر بھٹو بنے۔

اگر مریم نواز سیاست میں آئی تو میں اسے خوش آمدید کہوں گا وہ میری بیٹیوں کی طرح ہے۔

میاں صاحب کے ماضی کی وجہ سے عدالت ان سے خوفزدہ ہے۔

پاکستان میں ایک قانون ہمارے لئیے ہے اور ایک نواز شریف کے لئیے ہے۔

آج تک کبھی ایسا ہوا نہیں ہے کہ عدالت سے میاں صاحب کے خلاف کوئی فیصلہ آیا ہو۔

پیپلز پارٹی کے لوگوں پر جھوٹے الزامات لگائے گئے ہیں۔

سیف الرحمان نہ ہوتا تو آج بجلی کا بحران نہ ہوتا اور ملک ترقی کی بہتر پوزیشن میں ہوتا۔

جسٹس قیوم نے مجھے سزا دی تھی لیکن بعد میں اپنے کئیے کا ازالہ کرنے کی کوشش بھی کی تھی۔

پی ٹی آئی حکومت لے سکتی ہے تو لے لے لیکن ملک ان کے ہاتھوں میں محفوظ نہیں ہو گا۔

پی ٹی آئی کے ہاتھوں میں ملک محفوظ نہ ہونے کی وجہ ان کی امیچیورٹی ہے۔

میں نے کھل کر مردان کے واقعے کی مزمت کی ہے۔

میں نے یو این میں اپنی تقریر میں پہلا جملہ ہی یہ کہا تھا کہ سوری وی آر لوزنگ دی وار آف مائنڈ سیٹ۔

اے این پی نے پختونوں کا مائنڈ سیٹ بدلنے کی بہت کوشش کی لیکن بشیر بلور اپنی جان سے گئے اور ان کے ایک لیڈر کا اکلوتا بیٹا مارا گیا۔

اے این پی نے دہشت گردی کے خلاف بڑی قربانیاں دی ہیں۔

آج کل نیٹ کی وجہ سے بچے ورغلائے جاتے ہیں یہ بہت خطرناک روش ہے۔

دہشت گردی کے خلاف نہ اکیلی فوج کھڑی ہو سکتی ہے اور نہ سیاست دان سب کو مل کر لڑنا ہو گا۔

مجھے اس بات کا کوئی علم نہیں ہے کہ خورشید شاہ کے خلاف نیب میں کوئی کیس ہے۔

اسرائیلی جاسوس امریکہ میں پکڑا گیا تو اسے چھبیس سال کی سزا دی گئی۔

بھارت کا ایک سرونگ فوجی آفیسر پاکستان میں جاسوسی میں پکڑا گیا ہے ہمارے ہاں اس کی سزا موت ہے۔

مجھے بہت افسوس ہے نواز شریف کو بھارت کی دہشت گردی کے خلاف یو این او میں بہت پہلے چلے جانا چاہئیے تھا۔

پاکستان اور افغانستان میں اعتماد کا بہت بڑا فقدان ہے۔

افغانستان میں نان سٹیٹ اکٹرز کام کر رہے ہیں انہیں کوئی نہ کوئی استعمال کرتا رہتا ہے۔

پاکستان کی بہت بڑی کمزوری ہے کہ اس کا کوئی وزیرخارجہ نہیں ہے۔

ہم نے اپنی حکومت میں سوات کو دہشت گردوں سے پاک کیا مولانا فضل اللہ سرحد پار چلا گیا تھا۔

جنرل راحیل کے دور میں میں خرابی صحت کی وجہ سے ملک سے باہر گیا میں ایک گیپ بھی دینا چاہتا تھا یہ ایک سیاسی موو تھی۔

جنرل راحیل کے سعودی عرب جانے کے فیصلے میں عقل کو استعمال کرنا چاہئیے۔

جنرل راحیل کا تجربہ ان کی نئی جاب میں بہت مدد گار ثابت ہو گا۔

حسین حقانی نے امریکہ میں نوکری حاصل کرنے کے لئیے سب کچھ کیا۔

پاناما کا فیصلہ میاں صاحب کے خلاف بھی آیا تو الیکشن اپنے وقت پر ہی ہوں گے۔

میں آئندہ الیکش پیپلز پارٹی کے لئیے جیت کر دکھاؤں گا۔

http://naeemmalik.wordpress.com/

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s