25 May, 2017 23:03


NADEEM MALIK LIVE

www.samaa.tv/videos/NadeemMalik

25-MAY-2017

پاکستان مسلم لیگ ن کی حکومت میں پاکستان ترقی کر رہا ہے یہ بات نہ صرف پاکستان بلکہ پوری دنیا میں مانی جا رہی ہے۔ طارق فضل چوہدری کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

دنیا کہہ رہی ہے کہ پاکستان اس وقت نہ صرف بڑھتی ہوئی معیشت ہے بلکہ مستقبل میں آگے سے آگے ہی جائے گا۔

اگر جے آئی ٹی میں ہمیں غیر جانبداری دکھائی نہیں دے گی تو پھر سپریم کورٹ میں جانا ہمارا حق ہے۔

جے آی ٹی ہمیں سوال نامہ بھیجے گی تو ہم اس کا جواب دیں گے۔

جے آئی ٹی ایک تفتیشی باڈی ہے وہ خود بھی چل کر وزیراعظم کے پاس جا سکتی ہے۔

دنیا میں جہاں بھی کرپشن کی بات ہوتی ہے زرداری کا نام ضرور لیا جاتا ہے۔

حبیب خٹک محکمہ مردم شماری نے کہا کہ مردم شماری کا پہلا مرحلہ ختم ہو چکا ہے جبکہ دوسرا سات آٹھ روز میں ختم ہو جائے گا۔

گلگت بلتستان اور ناردرن ایریا میں برفباری کی وجہ کام رکا ہوا ہے جلد مکمل کر لیا جائے گا۔

کچھ علاقعوں میں سکیورٹی وجوحات کیو جہ سے مردم شماری نہیں ہو پائی وہاں ابھی فوج بھی نہیں جا رہی۔

یہ کہنا کہ ملک کی آبادی بائیس کروڑ ہو چکی ہے ابھی قبل از وقت ہو گا۔

پی ٹی آئی کے رہنما اسد عمر نے کہا کہ مسلم لیگ ن کی حکومت کے تینوں سالوں میں شرح نمو زیادہ بتائی جاتی ہے لیکن سال کے آخر میں کم ہوتی ہے۔

اس سال ایک اچھی چیز ہوئی ہے کہ ہماری بڑی فصلوں کے لئیے پچھلا سال اچھا رہا۔

حکومت نے ڈی اے پی کھاد پر سبسڈی دی جو اچھا کام تھا جس کی میں تعریف کرتا ہوں۔

معیشت کے سٹرکچر کے اعتبار سے زرداری صاحب جہاں معیشت کو چھوڑ کر گئے تھے آج بھی وہیں کھڑی ہے البتہ قرضوں میں بہت اضافہ ہو گیا ہے۔

پاکستان کی معیشت دنیا کے چیلنجوں کا مقابلہ نہیں کر پا رہی اور برآمدات نیچے جا رہی ہیں۔

حکومت نے اس سال سٹیٹ بنک سے بے تحاشہ قرضے لئیے ہیں۔

جے آئی ٹی کو جن لوگوں کی تفتیش کرنے کا کہا گیا ہے وہ ان کو بلایں گے اور ان میں نواز شریف بھی شامل ہیں۔

عمران خان سے بھی سوال پوچھا جانا چاہئیے انہوں نے اپنے خلاف کیس میں بنی گالہ کی پوری پوری منی ٹریل پیش کر دی ہے۔

طارق شفیع کو جے آئی ٹی پر اس طرح اعتراض نہیں کرنا چاہئیے بلکہ خصوصی طور پر بتایں کہ ان سے کیا سوالات پوچھے گئے۔

سٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کے مطابق پاکستان سے سالانہ دس ارب ڈالر کی منی لانڈرنگ ہو رہی ہے۔

اسحق ڈار نے کہا ہے کہ سوئس بنکوں میں پاکستانیوں کے دو سو ارب ڈالر پڑے ہوئے ہیں۔

دبئی میں چار سال میں پاکستانیوں نے آٹھ ارب ڈالر کی پراپرٹی خریدی ہے۔

ایان علی پاکستان سے تھیلے بھر بھر کر باہر لے جاتی رہی ہے۔

پاکستان میں بے انتہا کرپشن ہو رہی ہے اور کرپشن کرنے والےا داروں سے زیادہ طاقتور ہیں۔

پیپلز پارٹی کے نبیل گبول نے کہا کہ

نواز شریف ہر جگہ پاکستان کی ترقی کا زکر کرتے ہوئے صرف میٹرو بس اور موٹر وے کا ہی زکر کرتے ہیں

پی آئی اے اور سٹیل مل جو پیپلز پارٹی کے دور میں تین سو ارب روپے کے خسارے میں تھے آج ان کا خسارہ نو سو اسی ارب روپے ہو چکا ہے۔

پیپلز پارٹی نے حکومت چھوڑی تو پاکستان بارہ ہزار ارب روپے کا مقروض تھا آج بیس ہزار آٹھ سو ارب روپے کا مقروض ہے۔

پاکستان کہاں ترقی کر رہا ہے سرمایہ کاری بالکل نہیں ہے صرف ایک سی پیک پاکستان کی لائف لائین بنا ہوا ہے۔

مودی جس نے کہا کہ اس کا بھی پاکستان توڑنے میں ہاتھ ہے کے ساتھ مل کر دلی میں فیکٹریاں لگا رہے ہیں لیکن پاکستان کے لئیے کچھ نہیں کر رہے۔

جن کے بارے میں جے آئی ٹی بنے وہ اس کے سامنے پیش ہوتے ہیں اجمل پہاڑی زوالفقار مرزا کی طرح نواز شریف کو بھی پیش ہونا پڑے گا۔

طارق شفیع جے آئی ٹی کے رویہ پر اعتراض کر رہے ہیں کیا وہ توقع کر رہے تھے کہ جے آئی ٹی انہیں پھولوں کا ہار پہنائے گی۔

http://naeemmalik.wordpress.com/

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s