13 March, 2018 20:57


NADEEM MALIK LIVE

www.samaa.tv/videos/NadeemMalik

13-MARCH-2018

مسلم لیگ ن کا ضیاالحق کا ساتھ دینا ایک ایسا داغ ہے جسے دھویا نہیں جا سکتا۔ چوہدری جعفر اقبال کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

محمد خان جونیجو کی حکومت ختم کرنے میں بھی مسلم لیگ ن کے کردار کو ٹھیک نہیں کہا جا سکتا۔

اب سیاستدانوں کو آپس میں بیٹھ کر فیصلہ کرنا ہو گا۔

صادق سنجرانی کا کوئی سیاسی منشور نہیں ہے اور نہ وہ کسی کے سامنے جوابدہ ہیں۔

سیاست دانوں کو آپس میں مل بیٹھ کر جوتا پھینکنے جیسے واقعات کو روکنے کے لئیے کچھ کرنا چاہئیے۔

ہم گاؤں کے لوگ ہیں اپنے سیاسی مخالفین کی خوشیوں اور غموں میں شامل ہوتے ہیں۔

پیپلز پارٹی کی شازیہ مری نے کہا کہ

مسلم لیگ ن سینٹ کا لیکشن جیت جائے گی اس بات کا انہیں بہت گمان تھا۔

مسلم لیگ ن کو سینٹ کا الیکشن جیتنے کی اتنی امید تھی کہ یہ انتہائی تکبر کے بیانات دیتے رہے۔

جب عدلیہ شریف خاندان کے حق میں فیصلے دیتی تھی تو اچھی تھی لیکن اب نہیں ہے۔

آج مسلم لیگ ن بھٹو اور بینظیر کو شہید کہہ کر ان کے پیچھے چھپنے کی کوشش کر رہی ہے۔

وزیراطلاعات کو نواز شریف ایک نشہ لگ رہے تھے کل وہ نشہ اتر گیا۔

یہ الزمات ہیں کہ پیپلز پارٹی نے پیسوں سے سینٹ کا الیکشن جیتا لیکن اس الزام کو کوئی ثابت نہیں کر سکتا۔

جماعت اسلامی روز نواز شریف پر کرپشن کا الزام لگاتی ہے لیکن سینٹ کے لئیے ووٹ مسلم لیگ ن کو دیا۔

جوتا پھینکنے کے واقعات روکنے کے لئیے سیاست دانوں کو اپنے بیانات پر بھی غور کرنا ہو گا۔

سیاسی مبصر مشرف زیدی نے کہا کہ

پی ٹی آئی اور پیپلز پارٹی کا یہ کہنا کہ انہوں نے بلوچستان کو لوگوں کے لئیے قربانی دی یہ ایک مزاق ہے۔

صادق سنجرانی کا سینٹ کا چیرمین بن جانا ایک معجزہ ہے۔

نواز شریف سیاسی جینیس ہے وہ تین بار وزیراعظم منتخب ہوا لیکن تینوں دفعہ اپنے پیروں پر کلہاڑی مار لی۔

مسلم لیگ ن میں کسی کو کسی بات کا علم نہیں ہوتا سوائے نواز شریف کے۔

سیاست دانوں کو نوجوانوں کو بھڑکانا نہیں چاہئیے نوجوانوں کو اپنے جزبات کے لئیے ایک ڈیلیوری چاہئیے۔

پی ٹی آئی کے نعیم الحق نے کہا کہ

پی ٹی آئی نے فیصلہ کیا کہ کیونکہ مسلم لیگ اور پیپلز پارٹی سے سیاسی اختلافات ہیں انہیں ووٹ نہیں دیں گے بلکہ بلوچستان سے سینٹ کا چیرمین بنانے کی حمایت کریں گے۔

بلوچستان سے سینٹ کا چیرمین لانے کی تجویز پرویز خٹک نے دی تھی۔

الیکشن کمشن کے ساتھ مل کر ایک ضابطہ اخلاق دوبارہ سے بنانے کی ضرورت ہے۔

http://naeemmalik.wordpress.com/

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s