13 June, 2018 23:37


NADEEM MALIK LIVE

www.samaa.tv/videos/NadeemMalik

13-JUNE-2018

میں نے شیخ رشید کے خلاف پانچ سال تک کیس لڑا ہے جبکہ لکھا ہوا ہے کہ چار ماہ میں فیصلہ کرنا ہے۔ مسلم لیگ ن کے شکیل اعوان کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

شیخ رشید کی جتنی زمین ہے اس نے اس میں ایک سو تیرہ کنال کم بتائی ہے۔

شیخ رشید کا بحریہ ٹاؤن میں گھر ہے جس کی مالیت انہوں نے ایک کروڑ بتائی ہے جبکہ بحریہ ٹاؤن کا افسر کہتا ہے کہ اس کی بکنگ پرائس چار کروڑ اسی لاکھ تھی۔

شیخ رشید نے عدالت کو بتایا ہے کہ انہوں نے اپنی پندرہ کنال زمین بحریہ ٹاؤن کو دی تھی اس لئیے انہیں گھر ایک کروڑ روپے کا دیا گیا۔

آج بھی پندرہ کنال زمین شیخ رشید کے نام ہے وہ بحریہ ٹاؤن یا ملک ریاض کے نام نہیں کی گئی۔

شیخ رشید نے عدالت کو بتایا ہے کہ اس سے اپنے اثاثے بتانے میں غلطی ہو گئی تھی۔

شیخ رشید کے خلاف فیصلے کو ستاسی دن تک محفوظ رکھا گیا اور اس کے کاغزات نامزدگی داخل کرنے کے اگلے دن سنایا گیا۔

دوسرے صوبوں کے لوگ کہتے ہیں کہ کاش ان کے پاس بھی کوئی خادم اعلی جیسا لیڈر ہو۔

شیخ رشید کی ضمانت ضبط کروایں گے نہ کروائی تو سیاست چھوڑ دوں گا۔

چائنا میں شہباز شریف کے کام کو پنجاب سپیڈ کہا جاتا ہے۔

میں شیخ رشید کا کیس ہارا نہیں ہوں پپو ایک میں فیل ہوا ہے اور دو میں نتیجے کا انتظار ہے۔

پہلے میں نے کیس کیا تھا کہ شیخ رشید کے اثاثے ہیں اب میں کیس کروں گا کہ یہ اثاثے بنے کیسے ہیں۔

شیخ رشید تین مرلے کے گھر میں رہنے والا شخص آج بائیس ہزار کنال کا مالک ہے۔

شیخ رشید سالانہ صرف تین لاکھ روپے ٹیکس دیتے ہیں۔

پیپلز پارٹی کی شہلا رضا نے کہا

شیخ رشید کے کیس میں بہت زیادہ لوگ سمجھ رہے تھے کہ وہ نا اہل ہو جایں گے۔

مسلم لیگ ن کے ایک لیڈر کو پندرہ ہزار روپے جو غلطی سے ظاہر نہیں کئیے گئے تھے نا اہل قرار دے دیا گیا تھا۔

شیخ رشید کے فیصلے سے مثال قائم ہو گئی ہے کہ غلطی ہو جائے تو معاف ہو جائے گا۔

خارجہ پالیسی کا پارٹی کے منشور میں بتایا جاتا ہے ریٹرننگ آفیسر کا حق نہیں تھا کہ وہ مریم نواز سے خارجہ پالیسی پر سوال کرتا۔

کراچی سے میرے اور عمران خان میں سے کون جیتے گا یہ فیصلہ عوام کریں گے۔

میری خواہش ہے کہ کراچی میں ماضی کی طرح الیکشن نہ ہو کہ جب ٹھپے لگائے جاتے تھے۔

پی ٹی آئی کے شبلی فراز نے کہا کہ

آر او کو کسی پالیسی پر سوال کرنے کا حق نہیں ہے لیڈرز کی ٹی وی پر ڈبیٹ ہونی چاہئیے۔

جج ایک دوسرے سے فیصلے میں اختلارف کرتے ہیں لیکن ایسے نہیں کرنا چاہئیے کہ تاثر جائے کہ بے انصافی ہو رہی ہے۔

عمران خان ایک نیشنل لیڈر ہے وہ پنڈی سے جیتے اس لئیے دوبارہ وہاں نہیں گئے کیونکہ وہ قومی لیڈر ہیں۔

پی ٹی آئی نے کے پی کے میں اتنے کام کئیے ہیں لیکن کہیں عمران خان کا فوٹو نہیں لگایا۔

پی ٹی آئی نے کے پی کے میں بہت کام کئیے ہیں لیکن ان کی مشہوری نہیں کی۔

ایم کیو ایم کے اندرونی مسائل ہیں جو مجھے حل ہوتے دکھائی نہیں دیتے۔

لندن سے الیکشن کے بائیکاٹ کی آوازیں آ رہی ہیں اور کہا جا رہا ہے کہ خواتین کو گھروں سے نہیں نکلنے دینا۔

عمران خان کے کراچی کے آخری جلسے میں ساڑھے چار ہزار کرسیاں تھیں اور وہ بھی نہیں بھر سکی تھیں۔

ہر سیاست دان سے صرف یہ نہیں پوچھیں کہ اثاثے کتنے ہیں یہ بھی پوچھیں کہ وہ بنے کیسے۔

جو سوال ہم نواز شریف سے پوچھ رہے ہیں وہ ہر سیاست دان سے پوچھیں۔

http://naeemmalik.wordpress.com/

Advertisements

13 June, 2018 11:50


?ui=2&ik=7522c83caa&view=att&th=163f7e70af7afc9f&attid=0.1&disp=safe&realattid=ii_jicr7o650_163f7e70af7afc9f&zw

https://www.youtube.com/watch?v=l_OUgCdzmzc

https://www.samaa.tv/videos/nadeemmalik/2018/06/nadeem-malik-live-samaa-tv-12-june-2018/

http://siasatkorner.com/threads/nadeem-malik-live-shahid-khaqan-abbasi-exclusive-interview-12th-june-2018.399374/

NADEEM MALIK LIVE

www.samaa.tv/videos/NadeemMalik
12-JUNE-2018

TOPIC- PAKISTAN POLITICS

GUESTS- SHAHID KHAQAN ABBASI

FORMER PM SHAHID KHAQAN ABBASI OF PML-N WAS THE ONLY GUEST ON THE SHOW

He said that the objection on Dr Hassan Askari as the care taking CM of Punjab was not his personal but his party’s.

Dr Hassan Askari views on TV and newspaper columns are against PML-N.

PML-N will not be harmed in the oncoming elections because of Dr Hassan Askari but he should behave in such manners that there should be no question raised on the elections.

Ch Nisar should come to the party meeting to express his vies instead of the public.

The spat with Ch Nisar is not personal no one has the greater stature than the party.

Ch Nisar should apply to the party for ticket he has done so as well.

It has not been decided as yet where Shahbaz Sharif will contest the election from.

He has not heard such decision that Maryam Nawaz will be the party head after Nawaz Sharif Shahbaz Sharif is the president of the party.

If Shahbaz Sharif wins the election he will be the candidate for next PM of Pakistan.

The people that have left PML-N will cause no harm to the party.

Changing of the party is never beneficial people that are electable are not trustable.

The associates of Musharaf joined PML-N after the repentance some of them performed very well too.

PML-N government always put the facts about economy infront of the public and never claimed that everything is right now.

The government decided to give space to rupee against the dollar and it worked our exports have been increased.

I told all the facts about economy in my press conference from 2013 to 2018.

PML-N government took loans for investment its results will come forward after five to ten years.

In the beginning of NFC award twenty percent share was going to the provinces and eighty percent used to remain with the federation now it has been reduced to fifty eight percent.

PML-N government did not revoked the documents of Musharaf whatever was done was under the orders of the court.

Musharaf is the accused of article six the SC should take suo moto notice against him.

Nawaz Sharif had security threat and no extra security was given to him.

The new government can find out who was the person that crushed the child under his vehicle during the rally of Nawaz Sharif.

I as the PM did not took any interest in the case of the victim child that was killed by one of the vehicle during the rally of Nawaz Sharif.

Nawaz Sharif is under trial in a case his name is not even part of it.

Let be not talk about Ayyan Ali her case is the part of the history of the past.

I do not know who Baba Rahmate is I went to meet the CJ of Pakistan.

A commission should be formed on Asghar Khan Case and let it decide.

Hamood U Rehman commission report, what Zia Ul Haq and Musharaf did everything should be discussed infront of the commission.

PML-N will be the single largest party after the next elections.

The elections will be held on time there is no fear we will contest the elections.

http://naeemmalik.wordpress.com/